اوپن یونیورسٹی تعلیم و تربیت کے حصول کے لئے ملک بھر کی خواتین کی اولین ترجیح بن چکی ہے ، وائس چانسلر  - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

اوپن یونیورسٹی تعلیم و تربیت کے حصول کے لئے ملک بھر کی خواتین کی اولین ترجیح بن چکی ہے ، وائس چانسلر 


ملک میں ہزاروں خواتین اساتذہ موجود ہیں جنہوں نے یونیورسٹی سے تربیتی پروگرامز میں اسناد اور ڈگریاں حاصل کی ہیں ، پروفیسر ڈاکٹر شاہد صدیقی 
اسلام آباد(ڈیلی قدرت) علامہ اقبال اوپن یونیوسٹی پاکستان بھر میں خواتین کو بنیادی خواندگی سے پی ایچ ڈی تک تعلیم و تربیت کی سہولتیں فراہم کرنے والا ملک کا سب سے بڑا قومی ادارہ ہے اور اوپن یونیورسٹی تعلیم و تربیت کے حصول کے لئے ملک بھر کی خواتین کی اولین ترجیح بن چکی ہے ٗ یونیورسٹی کے 13.لاکھ سے زائد طلبہ میں 57. فیصد طالبات ہیں اور یہ تناسب خواتین کو تعلیمی نیٹ میں لانے کی مسلسل کوششوں کا نتیجہ ہے ." ان خیالات کا اظہار وائس چانسلر ٗ پروفیسر ڈاکٹرشاہد صدیقی نے عالمی یوم خواتین کے حوالے سے اپنے پیغام میں کیا ہے.انہوں نے کہا کہ ملک کے انتہائی دور دراز اور پسماندہ علاقوں میں جہاں خواتین کو سخت پردے ٗ کم عمری کی شادیوں اور غربت جیسی سماجی و معاشی مجبوریوں کا سامنا ہے ٗ علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی ابتدائی جماعتوں سے سلسلہ تعلیم ترک کرنے پر مجبور )ڈراپ آوٹ(خواتین کو "گرل پاور پراجیکٹ" کے تحت دوبارہ تعلیم کے دھارے میں شامل کررہی ہے اور ان کی رہائش گاہوں کے قریب ترین مقامات پر مڈل سطح تک مفت تعلیم فراہم کی جارہی ہے.انہوں نے کہا کہ اوپن یونیورسٹی پسماندہ علاقوں کی مخصوص ضروریات کے مطابق پیشہ ورانہ تربیتی پروگرامز جن میں لائیو سٹاک ٗ مرغبانی ٗ فرسٹ ایڈٗ غذا اور غذائیت ٗ بچے کی نگہداشت ٗ کنبے کی صحت اور نگہداشت اور بچے کی صحت و نشوونما جیسے خود روز گار کے حامل کورسسز بھی میٹرک تا بی اے نصاب میں شامل کرکے خواتین کو خود کفالت کی بنیاد پر تعلیمی مواقع فراہم کررہی ہے.ڈاکٹر شاہد صدیقی نے کہا ہے کہ یونیورسٹی جینڈز اینڈ ویمن سٹڈیز میں ایم ایس سی ڈگری اور پوسٹ گریجویٹ ڈپلومہ بھی پیش کرتی ہے. انہوں نے کہا کہ خواتین کی زیادہ تعداد اوپن یونیورسٹی کے ٹیچر ٹریننگ پروگرامز سے استفادہ حاصل کررہی ہیں اور اس وقت ملک میں ہزاروں خواتین اساتذہ موجود ہیں جنہوں نے یونیورسٹی سے تربیتی پروگرامز میں اسناد اور ڈگریاں حاصل کی ہیں.
 

..