نواز شریف کی   اپوزیشن   پر   شاعر انہ انداز میں  تنقید  ” کعبہ کس منہ سے جائو گے غالب، شرم تم کو مگر نہیں آتی” - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

 نواز شریف کی   اپوزیشن   پر   شاعر انہ انداز میں  تنقید  ” کعبہ کس منہ سے جائو گے غالب، شرم تم کو مگر نہیں آتی”


 '' جو میں سربسجدہ ہوا کبھی، تو زمین سے آگے لگی سدا، تیرا دل تو ہے صنم آشنا،مجھے کیا ملے گا نماز میں''

اسلام آباد (قدرت روزنامہ)  پاکستان  مسلم لیگ (ن) کے قائد  سابق وزیر اعظم  میاں محمد نواز شریف نے  اپوزیشن  کو  شاعری سے  خوب تنقید کا نشانہ بناتے  ہوئے کہا  کہ  '' کعبہ کس منہ سے جائو گے غالب، شرم تم کو مگر نہیں آتی'' '' جو میں سربسجدہ ہوا کبھی، تو زمین سے آگے لگی سدا، تیرا دل تو ہے صنم آشنا،مجھے کیا ملے گا نماز میں''. منگل کو  سابق وزیراعظم نے پاکستان  پیپلز پارٹی اور پی ٹی آئی  کوشاعرانہ انداز میں  کوب تنقید کا نشانہ بنایا  اور کہا کہ دل

میں کھوٹ ہو تو کبھی بھی کامیابی نہیں ملتی، اس موقع پر انہوں نے شعر پڑھا کہ '' جو میں سربسجدہ ہوا کبھی، تو زمین سے آگے لگی سدا، تیرا دل تو ہے صنم آشنا،مجھے کیا ملے گا نماز میں'' انہوں نے مرزا غالب کا شعر بھی پڑھ کر سنایاکہ '' کعبہ کس منہ سے جائو گے غالب، شرم تم کو مگر نہیں آتی'' ہم پاکستانی قوم کو بیچنے والے نہیں اور نہ ہی کمپرومائز کر نے والے  ہیں.

..

مزید خبریں :