’نماز پڑھنے سے جسم کا یہ حصہ مکمل صحت یاب ہو جاتا ہے‘ بالآخر مغربی سائنسدان بھی مان گئ - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

’نماز پڑھنے سے جسم کا یہ حصہ مکمل صحت یاب ہو جاتا ہے‘ بالآخر مغربی سائنسدان بھی مان گئ


اسلام آباد(قدرت روزنامہ) ’نماز پڑھنے سے جسم کا یہ حصہ مکمل صحت یاب ہو جاتا ہے‘ بالآخر مغربی سائنسدان بھی مان گئے، نماز کا ایسا فائدہ بتا دیا کہ غیر مسلم بھی ایمان لانے پر مجبور ہو جائیں نیویارک(نیوز ڈیسک)اہل مغرب اسلام کے خلاف جتنا بھی بغض رکھتے ہوں لیکن یہ تو سچ ہے کہ سورج جب آپ کی آنکھوں کے سامنے پوری آب و تاب سے دمک رہا ہو تو اس کی روشن کرنوں کا انکار کرنا ممکن نہیں ہوتا. اسلام کے سنہری اصولوں کے سامنے جدید سائنس کے سر تسلیم خم کرنے کی تازہ ترین مثال امریکا میں سامنے آئی ہے، جہاں سائنسدانوں نے ایک جامع تحقیق کے بعد اعتراف کر لیا ہے کہ باقاعدگی سے نماز ادا کرنے والے کمر، جوڑوں کے درد اور دیگر کئی مسائل سے محفوظ رہتے ہیں.

ضرور پڑھیں: امن ،ترقی وخوشحالی ،آئین وقانون کے احترام سے مشروط

’نماز پڑھنے سے جسم کا یہ حصہ مکمل صحت یاب ہو جاتا ہے‘ بالآخر مغربی سائنسدان بھی مان گئے، نماز کا ایسا فائدہ بتا دیا کہ غیر مسلم بھی ایمان لانے پر مجبور ہو جائیں دی انڈی پینڈنٹ کے مطابق سائنسی جریدے ’انٹرنیشنل جرنل آف انڈسٹرئیل اینڈ سسٹمز انجینئرنگ‘ میں ایک تازہ ترین تحقیق ’’ این ایرگو نومک سٹڈی آف باڈی موشن ڈیورنگ مسلم پرئیر یوزنگ ڈیجیٹل ہیومن ماڈلنگ (An Ergonomic Study of Body Motion During Muslim Prayer Using Digital Human Modeling) ‘‘ کے نام سے شائع کی گئی ہے . اس تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ باقاعدگی سے نماز پڑھنے سے کمر کے درد سے نجات مل جاتی ہے ، جوڑوں کا درد ختم ہو جاتا ہے، جوڑوں کی لچک میں اضافہ ہو جاتا ہے ، اور جسم کی عمومی توانائی ، طاقت اور صحت میں بھی اضافہ ہو جاتا

ہے. اس تحقیق کیلئے کمپیوٹر ماڈلنگ کی جدید ترین ٹیکنالوجی استعمال کی گئی جس کے ذریعے بھارتی ، ایشیائی اور امریکی مردو خواتین کی بڑی تعداد کی جسمانی حرکات کو نماز کی ادائیگی کے دوران مانیٹر کیا گیا. یہ تحقیق امریکی ریاست پنسلوانیا کی پین سٹیٹ بیرینڈ یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے کی، جن کا کہنا ہے کہ نتائج سے یہ بات واضح ہو گئی ہے کہ باقاعدگی سے نماز پڑھنا کمر، جوڑوں کے درد سے نجات دیتا ہے، بلکہ یہ پیچیدہ اعصابی بیماریوں کے لئے بھی شاندار علاج ہے. کلبھوشن کے معاملے پر پاکستان نے ایک اچھا قدم اٹھاتے ہوئے اس ملاقات کو بہتر طریقے سے استعمال کر کے میڈیا بلکہ پوری دنیا میں پاکستان کا ایک اچھا امیج بنایا ہے اور بھارت کو اسی کی چال میں مذید پھنسایا جا رہا ہے .کلبھوشن یادیو کی اہلیہ کے جوتے میں چھپائی جانے والی چِپ مخصوص سٹیل سے بنائی گئی تھی، تفصیلات کے مطابق ایک موقر قومی اخبار کی رپورٹ کے مطابق چِپ کا لیبارٹری میں جائزہ لیا جا رہا ہے اور ایسا لگتا ہے کہ یہ چِپ اسرائیل کی بنائی ہوئی ہے کیونکہ اس طرح کی ڈیوائسز بنانے کے لیے اسرائیل مشہور ہے. اخبار کا کہنا ہے کہ دلچسپ بات یہ ہے کہ یہ چِپ کلبھوشن یادیو کی اہلیہ کے جوتے میں چھپائی گئی،جوتے کی موٹائی کی وجہ سے سکیورٹی حکام کو شک گزرا اور ان کے جوتے اتروا لیےگئے، ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ طے ہونا باقی ہے کہ چپ جاسوسی کے مقاصد کے لیے سمگل کی گئی تھی یا اسے کسی دوسرے منظم منصوبے کے لیے استعمال میں لایا جانا تھا، اس چِپ سے متعلق لیبارٹری آنے پر سب واضح ہو جائے گا کہ اصل کہانی کیا ہے؟ کلبھوشن یادیو کی اہلیہ کے جوتے میں چھپائی جانے والی چِپ مخصوص سٹیل سے بنائی گئی تھی،خیال رہے کہ کلبھوشن بھارتی بحریہ کاحاضرسروس افسر، دہشتگرد اورجاسوس ہے، بھارت یادرکھے کہ یہ کوئی عام ملاقات نہیں تھی اور اس ملاقات کے حوالے سے دونوں ممالک نے سفارتی چینلزکے ذریعے تمام امورطے کئے تھے، دونوں خواتین کے کپڑے اور جیولری واپس کردئیے گئے تھے جبکہ کلبھوشن کی اہلیہ کی جوتوں میں سے ایک دھاتی چپ برآمد ہوئی ہے، متعلقہ ادارے اس دھاتی چپ کا بغور جائزہ لے رہے ہیں. وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کلبھوشن یادیو سے اس کی ماں اور بیوی کی ملاقات پر ردعمل دیتے ہوئے بھارتی حکومت کے تما م الزامات مستردکردیئے ہیں. وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ ملاقات انسانی ہمدردی،اسلامی تعلیمات اورجذبہ خیرسگالی کے تحت کرائی اور بھارت کو پاکستان کے جذبہ خیرسگالی کو تسلیم کرنا چاہیے .انہوں نے بھارتی حکام کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک جاسوس ، دہشت گرد اور حاضر سروس ملٹری آفیسر کی اہل خانہ سے ملاقات تھی اور بھارت یاد رکھے یہ ملاقات معمولی نہیں تھی.کیوں کہ کلبھوشن ایک سزا یافتہ مجرم ،حاضر سروس ملٹری آفیسر ،جاسوس اور دہشت گرد ہے جس کے ہاتھ سینکٹروں پاکستانیوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں. اس ملاقات کے دوران مناسب سیکیورٹی انتظامات بہت ضروری تھے. بھارت کی جانب سے بے بنیاد پروپیگنڈہ کیا جا رہا ہے ، مشکلات کے باوجود پاکستان نے بھارتی دہشت گرد کے اہل خانہ سے ملاقات کامیابی سے کرائی اور کامیابی کا اندازہ کلبھوشن کے اہل خانہ کی جانب سے حکومت پاکستان کا شکریہ ادا کرنے سے لگایا جاسکتا ہے. وزیر خارجہ کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان نے مہمان خواتین کو عزت سے نوازہ اور ملاقات اسلامی تعلیمات اور انسانی بنیادوں کے تحت کرائی گئی تھی، ملاقات کادورانیہ 30منٹ طے تھا اور خواتین کی درخواست پراس کا دورانیہ 40 منٹ کیاگیا. بھارت کی جانب سے میراٹھی زبان میں بات کرنے کی اجازت نہ دینے کاواویلامچایاجارہاہے جبکہ کپڑے بدلوانے اور جوتا واپس نہ کرنے کا ڈھنڈورا پیٹا جا رہا ہے.کلبھوشن کی

اہلیہ کے جوتے سیکیورٹی کلیئر نہ ہونے کی وجہ سے رکھ لیے گئے تھے ، ان جوتوں میں سے ایک دھاتی چپ برآمد ہوئی ہے اور متعلقہ ادارے اس چپ کا جائزہ لے رہے ہیں. بھارت کا واویلا بالکل بے بنیاد ہے کیوں کہ اس حوالے سے تمام معاملات سفارتی سطح پر پہلے سے طے کئے گئے تھے اور اس ملاقات کے دوران مناسب سیکیورٹی اقدامات بہت ضروری تھے. بھارت کا واویلا بالکل بے بنیاد ہے کیوں کہ اس حوالے سے تمام معاملات سفارتی سطح پر پہلے سے طے کئے گئے تھے اور اس ملاقات کے دوران مناسب سیکیورٹی اقدامات بہت ضروری تھے قرآن شریف دنیا کا سب سے بڑا وہ ظاہر معجزہ ہے اور وہ الہامی کتاب ہے جس میں قیامت تک پیش آنے والے ہر واقعہ کی پیش گوئی کردی گئی ہے، کچھ باتیں کھلی اور کچھ ڈھکی چھپی ہیں تاکہ سمجھنے والے اسے سمجھ سکیں جیسا کہ اللہ تعالیٰ خود فرماتا ہے کہ عقل والوں کے لیے اس میں کھلی نشانیاں موجود ہیں. آج دنیا زمین کے مسلسلبڑھنے والے درجہ حرارت سے پریشان ہے، جسے گلوبل وارمنگ کا نام دیا گیا ہے، سائنس دان بھی یہی کہہ رہے ہیں کہ زمین کا درجہ حرارت مسلسل بڑھ رہا ہے، اس ضمن میں قرآن شریف میں بہت واضح طور پر کم از کم دو بار اللہ تعالیٰ دنیا بھر کو خبردار کرچکے ہیں. سورۃ الانبیا میں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے:’ ’بلکہ ہم نے ان کو اور ان کے باپ دادا کو برتاوا دیا یہاں تک کہ زندگی ان پر دراز ہوئی تو کیا نہیں دیکھتے کہ ہم زمین کو اس کے کناروں سے گھٹاتے آرہے ہیں تو کیا یہ غالب ہوں گے؟( سورۃ انبیاء، آیت 44)‘‘ سورہ الرعد میں بھی اللہ تعالیٰ نے فرمایا ہے:’’کیا انہوں نے نہیں دیکھا کہ ہم زمین کو اس کے کناروں سے گھٹاتے چلے آتے ہیں اور خدا (جیسا چاہتا ہے) حکم کرتا ہے کوئی اس کے حکم کا رد کرنے والا نہیں اور وہ جلد حساب لینے والا ہے(سورۃ الرعد، آیت 41)‘‘.ان دونوں سورۃ کی آیات کا ترجمہ دیکھیں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ اور ہم زمین کے کناروں کو گھٹاتے چلے آئے ہیں؟ کیسے؟؟’’زمین پر تین حصے پانی، ایک حصہ خشکی‘‘.ہماری زمین پر تین حصے پانی اور صرف ایک حصہ یا اس سے کم خشکی ہے، سائنس دانوں کے مطابق زمین پر 71 فیصد پانی اور 29 فیصد خشکی ہے.اس خشک حصے کا 20 فیصد پہاڑوں پر مشتمل ہے اور 20 فیصد حصہ برف سے ڈھکا ہوا ہے جس میں پورا براعظم انٹار کٹیکا شامل ہے جہاں برف کے عظیم الشان گلیشیر بھی موجود ہیں.’’زمین کا درجہ حرارت مسلسل بڑھ رہا ہے‘‘. سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ زمین کا درجہ حرارت مسلسل بڑھ رہا ہے اس کی وجہ انسان خود ہے جو اپنی ایجادات، درختوں کے کٹاؤ اور دیگر اقسام کی ماحولیاتی آلودگی پھیلانے کے سبب زمین کے اطراف موجود اوزون کی تہہ ختم کررہا ہے جس کے باعث دھوپ کی شعاعیں چھن کر آنے کے بجائے براہ راست زمین پر پڑ رہی ہیں اور درجہ حرارت بڑھ رہا ہے.’’

..

ضرور پڑھیں: چینی فوج بھارت میں داخل اور۔۔۔ بڑی خبر آگئی

مزید خبریں :