’میں ٹرین میں بیٹھی تھی اور میرے ساتھ بیٹھا یہ لڑکا اپنے دوستوں کو بتارہا تھا کہ اس کی محبوبہ۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے آدمی کا ایسا شرمناک ترین - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

’میں ٹرین میں بیٹھی تھی اور میرے ساتھ بیٹھا یہ لڑکا اپنے دوستوں کو بتارہا تھا کہ اس کی محبوبہ۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے آدمی کا ایسا شرمناک ترین


اسلام آباد(قدرت روزنامہ) برطانوی شہر بورن ماﺅتھ سے مانچسٹر جانے والی ٹرین میں ایک نوجوان اپنے دوستوں کے سامنے شیخیاں بگھار رہا تھا اور انہیں اپنے معاشقوں کے بارے میں بتا رہا تھا. اس کی باتیں سن کر ان کے قریب ہی بیٹھی ایک لڑکی نے ایسا کام کر دیا کہ وہ شیخی باز نوجوان اب کبھی گھر واپس نہ جا سکے گا.

ضرور پڑھیں: امن ،ترقی وخوشحالی ،آئین وقانون کے احترام سے مشروط

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق یہ نوجوان اپنے دوستوں کو بتا رہا تھا کہ کس طرح وہ دیگر خواتین کے ساتھ جسمانی تعلقات استوار کرکے اپنی گرل فرینڈ کے ساتھ بے وفائی کرتا ہے.اس کی یہ باتیں قریب بیٹھی ہوئی 23سالہ ایملی شیفرڈ نامی لڑکی بھی سن رہی تھی. اس نے اپنا فون اٹھایا اورسماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ایک ٹویٹ کر دی، جس میں اس نے لکھا کہ ”اگر کسی لڑکی کا ’بین‘ (Ben)نامی بوائے فرینڈ ہے اور وہ اس وقت بورن ماﺅتھ سے مانچسٹر جانے والی ٹرین میں سفر کر رہا ہے تو وہ لڑکی سن لے کہ یہ تمہارے ساتھ بے وفائی کر رہا ہے. وہ اس وقت اپنے دوستوں کو اپنے معاشقوں کے بارے میں بتا رہا ہے.ابھی اسے چھوڑ دو.“ رپورٹ کے مطابق ایملی کی یہ ٹویٹ جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی جسے اب تک 24ہزار صارفین ری ٹویٹ کر چکے ہیں. اس ٹویٹ کے بعد لوگ بین نامی اس نوجوان کے متلاشی ہیں جو اس وقت ٹرین میں سفر کر رہا تھا.ایملی نے بعد میں ایک ٹویٹ کی اور لوگوں کو بتایا کہ ”کئی لڑکیاں مجھ سے رابطہ کر رہی ہیں تاہم ابھی تک اس بین کے متعلق معلوم نہیں ہو سکا جو اس وقت ٹرین میں سفر کر رہا تھا.“

صارفین کی اکثریت نے ایملی کے اس کام کو سراہا کہ اس نے ایک بے وفا شخص کو بے نقاب کیا، تاہم کچھ لوگوں نے اس پر تحفظات کا اظہار بھی کیا. ان کا کہنا تھا کہ ”اس وقت ٹرین میں بین نام کے کئی مرد موجود ہو سکتے ہیں لہٰذا ان سب کی بیویاں اور گرل فرینڈز ان کا جینا محال کر دیں گی.“ خلیج ٹائمز کے مطابق ملزم کے جبروتشدد سے دلبرداشتہ ہوکر بالآخر لڑکی کی والدہ نے دسمبر2014میں شکایت درج کرائی تھی جبکہ باپ کی بدفعلی کا نشانہ بننے والی لڑکی کے ہاں مارچ2015میں بچہ پیداہواتھا جو بعدازاں جون میں انتقال کرگیا.خاتون کی شکایت پر پراسیکیوشن نے مقدمہ درج کرلیاتھا اور ملزم کو قید کیساتھ ساتھ مجموعی طورپر 1500روپے جرمانہ بھی کیاگیا.عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہاکہ جرم کو عدالت نے سنجیدگی سے لیا اور زیادہ سے زیادہ سزا سنائی . پراسیکیوٹر نے بتایاکہ اس تشدد کی وجہ سے لڑکی نفسیاتی طورپر مریض بن چکی ہے. -1 ”آپ میری زندگی میں آنے والی پہلی خاتون ہیں.“ اگرچہ یہ جملہ کہنے والے مرد درجنوں خواتین کے ساتھ عشق لڑا چکے ہوں مگر یہ کہنا ہمیشہ ان کی محبوبہ کو مسرور کردیتا ہے. -2 ”مجھے کبھی کسی کی قربت میں ایسا لطف نہیں ملا.“ یہ وہ جملہ ہے جو تجربہ کار خواتین کو خصوصی طور پر نہایت متاثرکرتا ہے اور وہ اسے اپنی جیت سمجھتی ہیں. -3 ”تم اس قدر شائستہ اور تہذیب یافتہ ہو کہ تم دنیا کی بہترین ماں ثابت ہوگی.“ یہ جملہ شریف النفس خواتین کے لئے بہت موزوں ہیں اور وہ اسے اپنی تعریف سمجھتی ہیں....جاری ہے. -4 ”پلیز ساری زندگی میرے ساتھ رہنا.“ یہ جملہ خواتین کو احساس تحفظ دلاتا ہے اور انہیں اس بات کا خدشہ نہیں رہتا کہ کل اس مرد کی نیت بدل سکتی ہے. -5 ”میری خوش قسمتی ہے کہ مجھے تم جیسی محبوبہ ملی ہے.“ کسی خاتون کو اہمیت کا احساس دلانے کے لئے اس سے اچھا جملہ نہیں ہوسکتا کیونکہ یہ سن کر خاتون اپنے آپ کو دوسری خواتین سے افضل سمجھتی ہے. -6 ”آئی لو یو!“ یہ وہ جملہ ہے جو ہر روز اربوں مرد اربوں خواتین کو کہتے ہیں مگر اس کی اہمیت کسی صورت کم ہونے میں نہیں آرہی اور اگرچہ سب کو معلوم ہے کہ یہ اب ایک روایتی جملہ بن چکا ہے مگر کسی بھی خاتون کو یہ جملہ سننے سے جو خوشی محسوس ہوتی ہے اس کا کوئی مقابلہ نہیں ہے. بیٹا میں قبر سے بات کر رہا ہوں اور“ 2سال قبل انتقال کرجانے والا باپ اپنے بیٹے کو لکھی جانے والی ای میل میں یہاں سے بات شروع کرتا ہے اور اپنی موت کے 2سال بعد اپنے بیٹے سے ایسی باتیں کہتا ہے کہ جان کر کسی کی بھی آنکھیں نم ہو جائیں.

برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ریڈیٹ(Reddit) پر نوجوان نے اپنے باپ کی طرف سے آنے والی اس ای میل کی تفصیلات شیئر کی ہیں. نوجوان کے مطابق اس کا باپ لکھتا ہے کہ ”ہیلو بیٹا! میں قبر سے تم سے بات کر رہا ہوں، جیسا کہ میں تم سے ہمیشہ کہا کرتا تھا کہ میں واپس آؤں گا اور تمہارے معمولات کی تمام خبر رکھوں گا. مجھے امید ہے کہ اب تک تم اس بوڑھے آدمی کے بغیر زندگی گزارنا سیکھ چکے ہوگے اور اپنی ماں کی بھی دیکھ بھال کررہے ہو گے.مجھے تم پر مکمل اعتماد ہے کہ تم مجھ سے بڑھ کر اپنی ماں کا خیال رکھ رہے ہو ں گے.“ ای میل میں نوجوان کا والد مزید لکھتا ہے کہ ”زندگی میں میں نے تمہیں خوش رکھنے کے لیے کچھ باتیں نہیں بتائیں یا اس طریقے سے بتائیں کہ تم سمجھ نہیں سکے. اب میں تمہیں وہ سب باتیں بتانا چاہتا ہوں.“ اس کے بعد بیرسی(Beersie) نامی نوجوان لکھتا ہے کہ وہ کچھ ذاتی نوعیت کی باتیں شروع کر دیتے ہیں جو سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر شیئر نہیں کی جا سکتیں.دو سال قبل انتقال کرجانے والے باپ کی طرف سے بیٹے کو ای میل موصول ہونا کوئی افسانوی بات نہیں ہے بلکہ ایک ویب سائٹ FutureMe.Orgصارفین کو یہ سہولت فراہم کرتی ہے کہ وہ خود کو یا اپنے کسی بھی عزیز کو ای میل لکھ سکتے ہیں. یہ ای میل فوری طور پر نہیں بھیجی جاتی بلکہ صارف جو تاریخ وہاں درج کرتا ہے اسی تاریخ کو بھیجی جاتی ہے. مثال کے طور پر اگر آپ آج اس سروس کے ذریعے خود کو ای میل کرتے ہیں اور دو سال بعد کی تاریخ منتخب کرتے ہیں تو یہ ای میل آپ کو دو سال بعد موصول ہو گی. اسی سروس کے ذریعے نوجوان کے باپ نے اپنے انتقال سے قبل یہ ای میل اپنے بیٹے کو لکھی تھی جو مقررہ تاریخ کو اسے موصول ہو گئی. وہ لوگوں کو زبردستی خنزیر کا گوشت کھلایا کرتا تھا جو انکار کرتا اسے قتل کروا دیتا، چنانچہ اس عورت کو بھی اپنے بیٹوں سمیت بادشاہ کے پاس لایا گیا. اس نے سارہ کے سب سے بڑے بیٹے کو پاس بلا کر کہا کہ خنزیر کا

..

ضرور پڑھیں: چینی فوج بھارت میں داخل اور۔۔۔ بڑی خبر آگئی

مزید خبریں :