چلاس میں سکولوں کو جلانا ملک کے خلاف بڑی سازش  - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

چلاس میں سکولوں کو جلانا ملک کے خلاف بڑی سازش 


چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے ڈیموں کی تعمیر کے خلاف سازشیں اور کرپشن کے خاتمہ کے خلاف اعلانِ جہاد کر تے ہوئے کہاہے کہ ملک میں چالیس سال سے ڈیم نہیں بنے ہم نے ڈیمز کی تعمیر کا حکم دیا تو گلگت بلتستان میں سازشیں شروع ہوگئیں، ہمیں تمام سازشوں کو مل کر کچلنا اور معاشرے سے کرپشن کے ناسور کو ختم کرنا ہوگا ،کرپشن کے ناسور اور ڈیموں کی تعمیر نہ کی تو ہم اپنے بچوں کو کچھ نہیں دے سکیں گے ، قائد نے بڑی محنت سے پاکستان بنایا مگر بدقسمتی سے قائداعظم اور لیاقت علی خان کے جانے کے بعد ملک میں صرف ایک چیز نے راج کیا وہ کرپشن ، کرپشن اور کرپشن،پاکستان سے زیادہ عزیز میرا کوئی نہیں ہے ، انسانی حقوق سے متعلق ہفتے اور اتوار کو بھی کیسز سنتا ہوں ، بنیادی حقوق کی فراہمی عدلیہ کا احسان نہیں ہے ،یہاں تعلیم کو کاروبار بنادیا گیا ہے ، بہت زیادہ فیسز لی جا رہی ہیں ،گلگت کے دورے کے دوران مجھے بتایا گیا کہ دیامر میں کوئی چوری اور قتل کا واقعہ رپورٹ نہیں ہوا، اب دیامر بھاشا ڈیم کی آواز اٹھائی تو گلگت بلتستان میں تعلیمی ادارے جلا دیے گئے ، یہاں ڈیم بننے سے روکا جا رہا ہے ، میں بنا ثبوت کسی پر الزام نہیں لگا رہا ، چالیس سال تک اس ڈیم کو نہیں بننے دیا گیا ، اب عوام اس ڈیم کے محافظ ہیں .ہم نے ملک کو کرپشن سے پاک نہ کیا تو ملک ہمارے بچوں کے رہنے کے قابل نہیں رہے گا .

ضرور پڑھیں: ”ہمیں تو چائے ملی اور نہ ہی بیٹھنے کیلئے صحیح جگہ لیکن۔۔۔“ عمران خان کی تقریب حلف برداری میں شریک کرکٹرز کا ”شکوہ“ بھی سامنے آ گیا، جان کر آپ حیران پریشان رہ جائیں گے

ہمیں اپنی اصلاح کرنی ہے ، پاکستان سے زیادہ عزیز میرا کوئی نہیں ہے ، یہاں تعلیم کو کاروبار بنادیا گیا ہے ، بہت زیادہ فیسز لی جا رہی ہیں ، پاکستان کے بعد آزاد ہونے والے ممالک کی ترقی دیکھیں کہ وہ کہاں کھڑے ہیں اور ہم کہاں کھڑے ہیں.انہوں نے کہا کہ آنے والی حکومت سے کہتا ہوں تعلیم کی فراہمی کو زیادہ اہمیت دیں ، بعض کیسز ایسے آئے جس میں پلان کرپشن سامنے آئی ، عام پرائیویٹ سکولوں میں 35ہزار روپے فیس ہے ہم ایسے انہیں چلنے دیں گے ڈیمز ہماری زندگی ہیں یہ ہمیں ہر صورت بنانے ہیں ، کراچی کی پانی کی مافیا کی وبا اب اسلام آباد میں بھی آگئی ہے ، پانی کا بحران اس لئے آیا کہ ڈیموں پر توجہ نہیں دی گئی ، ڈیم کی تعمیر کے پاکستان کے عوام محافظ ہیں اور آپ نے پہرہ دینا ہے ، ہم نے کالا باغ ڈیم کے بارے میں یہ نہیں لکھا کہ یہ نہیں بنے گا ، ہم نے کہا ہے کہ کالا باغ ڈٰم تمام صوبوں کی مشاورت اور اجازت سے بنے گا مگر ابھی وہ ڈیم بنائے جائیں جن پر کوئی تنازع نہیں ہے .انہوں نے کہا کہ یہاں ڈیم بننے سے روکا جا رہا ہے ، میں بنا ثبوت کسی پر الزام نہیں لگا رہا یہ ڈیم پاکستان اور ہماری زندگی کیلئے ناگزیر ہے ، چالیس سال تک اس ڈیم کو نہیں بننے دیا گیا ، اب عوام اس ڈیم کے محافظ ہیں .جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ تعلیم اور صحت کے مسائل حل کئے بغیر مسئلہ حل نہیں ہوگا اور تمام صوبوں کا اتفاق رائے قائم کر کے کالا باغ ڈیم بنایا جائے . دیامر کے علاقہ چلاس میں دو روز قبل لڑکیوں کے 12سکول جلادیئے گئے جس کے بعد پولیس نے نامعلوم دہشتگردوں کے خلاف آپریشن شروع کردیا فائرنگ تبادلہ میں ایک پولیس اہلکار جاں بھق تین زخمی جبکہ ایک دہشت گرد بھی مارا گیا اسکے باوجود دوسرے روز رات کو پھر دو سکول جلا دیئے گئے چیف جسٹس کا کہنا بالکل درست ہے کہ دشمن ممالک ہی نے پاکستان کو آبی قلت کا شکاربنایا ہے اور یہی قوتیں کم وبیش گذشتہ چالیس سال سے پاکستان میں ڈیم نہیں بننے دے رہے ہیں سیاسی جماعتوں کو سالانہ بھاری رقم فراہم کرتی ہے پھر ان علاقوں میں دہشت گردوں کی موجودگی آقاؤں کے حکم پر کارروائی یہ صورتحال یقیناًپاکستانی قوم اور حساس اداروں کے لئے لمحہ فکریہ ہونی چاہیے ضرورت ان دہشتگردوں کیساتھ ساتھ انکے سہولت کاروں کے خاتمے کی ہے .جو یقیناًعام لوگ نہیں بااثر شخصیت ہی ہونگی ...

ضرور پڑھیں: ’’مجھے اب ڈرلگتا ہے کہ ۔ ۔ ۔‘‘ معروف اداکارہ ریشم نے شادی سے ہی انکار کردیا ، وجہ ایسی کہ آپ کو بھی شدید دکھ ہوگا