عمران خان کا بلدیاتی نظام اراکین اسمبلی کے تسلط سے نکالنے کا عندیہ  - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

عمران خان کا بلدیاتی نظام اراکین اسمبلی کے تسلط سے نکالنے کا عندیہ 


پاکستان تحریک انصاف کے سر براہ عمران خان نے کہا ہے کہ اقتدار سنبھالنے کے بعد جنوبی پنجاب صوبے کا قیام ان کی اولین تر جیحات میں شامل ہے مثالی بلدیاتی نظام کے زریعے نچلی سطح سے عوام کے مسائل کا حل یقینی بنائیں گے،جنوبی پنجاب کے عوام نے تحریک انصاف پر جس اعتماد کا اظہار کیا ہے ہم اپنے تمام وعدوں کی تکمیل سے جنوبی پنجاب کی محرومیوں کا ازالہ کر کے عوام کے اعتماد پر پورا اتریں گے،جنوبی پنجاب سمیت پورے ملک میں زراعت اور کاشت کاروں کی ترقی کیلئے انقلابی اقدامات کیے جائیں گے،پنجاب ہی اصل میدان جنگ ہے.پنجاب میں ایسا وزیر اعلی لائیں گے جو حقیقی معنوں میں تبدیلی لائے گا.

ضرور پڑھیں: منرل واٹرکمپنیوں کےخلاف بھی نوٹس لوں گا،چیف جسٹس پاکستان کاسیمنٹ فیکٹریوں کو پانی فراہم کرنے والے تالاب بند کرنے کا حکم

قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے ارکان اپنا کام کریں گے نچلی سطح پر ترقیاتی کام عوام کی مرضی کے مطابق ان کے بلدیاتی نکائندوں کے زریعے کروائے جائیں گے.اس موقع پر عمران خان نے پنجاب کو اصل میدان جنگ قرار دیتے ہوئے کہا کہ مجھے اچھی طرح معلوم ہے کہ عوام کی نظریں اس وقت ہمارے وزیر اعلی ٰپر ہیں .وزیر اعلیٰ کے منصب کیلئے انتہائی متحرک ،فعال اور ایماندار شخصیت کا انتخاب کیا جائے گا.جو عوام کی امیدوں اور توقعات پر پورا اترے.اور صوبے میں حقیقی معنوں میں عوام کو تبدیلی نظر آئے گی. عمران خان کے ایک بار پھر اپنے وعدوں کی تکمیل کا عزم دہرادیا ہے اور بالخصوص بلدیاتی نظام کو مکمل طور پر فعال کرتے ہوئے ارکان اسمبلی کو انکے اصل کام قانون سازی وغیرہ کی جانب توجہ دلانے کی جانب عندیہ دیا ہے اس میں کوئی شک نہیں کہ ہر علاقے کو درپیش مسائل سے بلدیاتی نمائندے کونسلر وناظمین ہی بخوبی آگاہ ہوتے ہیں اور پھر کونسلر سے ناظمین پھر اراکین اسمبلی تک مسائل کی فریاد پہنچانے عرصہ بیت جاتا ہے اور پھر کرپشن ہوتی ہے حصے بانٹے جاتے ہیں اس طرح اول تو ترقیاتی کام ہوتا ہی نہیں ہے اگر ہو بھی جائے تو کرپشن کی وجہ سے اس کا معیار انتہائی گھٹیا ہوتا ہے جہاں تک انہوں نے پنجاب میں بڑی تبدیلی لانے کا بھی عندیہ دیا ہے انہیں بخوبی احساس ہونا چاہیے کہ کم وبیش گذشتہ 20سال سے پنجاب میں ن لیگ کی حکمرانی ہے اور حکمرانی بجائے ہر وہ عمران خان کے خلاف بہت سی مشکلات لاسکتے ہیں بالخصوص جبکہ تمام بیورو کریسی اور پنجاب پولیس افسران انکے درباری بنے ہوتے ہیں تاہم قوم کو عمران خان سے بہت سی توقعات ہے سب سے اہم مسئلہ جسکا عمران خان خود متعدد بار ذکر کرچکے ہیں کرپشن اور کرپٹ افراد کا احتساب ہے سب برائیوں کی جڑ ہے اسے ختم کردیں قابو پالیں تو سب مسائل خود بخود حل ہونا شروع ہوجائیں گے ...

ضرور پڑھیں: ’’ سابق کرکٹرز کی عمران خان سے ملاقات لیکن کسی کو بھی ہمت نہ ہوئی کہ ۔ ۔ ۔‘‘ نجی ٹی وی چینل کا ایسا دعویٰ کہ شائقین کرکٹ کی حیرت کی انتہاء نہ رہے گی