جو مسلمان روزے رکھتے ہیں ان کے جسم میں کیا تبدیلیاں آتی ہیں ؟ برطانوی ماہرین بھی اسلام کی عظمت کے قائل ہو گئے - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

جو مسلمان روزے رکھتے ہیں ان کے جسم میں کیا تبدیلیاں آتی ہیں ؟ برطانوی ماہرین بھی اسلام کی عظمت کے قائل ہو گئے


نیویارک (قدرت روزنامہ)ہر مسلمان جانتا ہے کہ روزہ ایک ایسی عبادت ہے جو ناصرف بے پناہ اجر و ثواب کا باعث ہے بلکہ انسانی صحت کے لئے بھی اس کے فوائد حیرت انگیز ہیں. مسلمانوں کی روزے سے محبت تو ان کے عقائد کا حصہ ہے لیکن جدید سائنسی تحقیقات نے غیر مسلموں کو بھی روزے کی افادیت کا گرویدہ کر دیا ہے.اخبار دی مرر کی رپورٹ کے مطابق امریکی سائنسدانوں نے ایک تحقیق کی ہے جس میں انکشاف ہوا ہے کہ روزہ رکھنا ناصرف عمومی صحت اور قوت مدافعت کے لئے فائدہ مند ہے بلکہ ہارٹ اٹیک، فالج اور حتیٰ کہ کینسر جیسی بیماری سے بھی تحفظ فراہم کرتا ہے. سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ روزہ رکھنے سے ہمارے جسم کو وقفہ اور آرام ملتا ہے، جس کے نتیجے میں جسم کے اندر ڈی این اے کی بحالی اور بیماری کے خلاف مزاحمت رکھنے والے نئے خلیات بھی پیدا ہوتے ہیں. اس تحقیق میں حیران کن انکشاف ہوا کہ بریسٹ کینسر جیسی مہلک بیماری سے صحت یاب ہونے والی جن خواتین نے باقاعدگی سے تقریباً 13 گھنٹے پر محیط روزے رکھے ان میں اس بیماری کے دوبارہ پیدا ہونے کا خدشہ تقریباً ایک تہائی کم ہوگیا. تجربات کے دوران معلوم ہوا کہ ان خواتین میں ناصرف بریسٹ کینسر کے دوبارہ پیدا ہونے کا خدشہ 36 فیصد کم ہوا تھا

بلکہ اس بیماری کی وجہ سے موت کا خدشہ بھی 21 فیصد کم ہوگیا. اس کے برعکس مختصر وقفوں کے بعد کھانا پینا جاری رکھنے والے افراد میں ناصرف بلڈ شوگر کا لیول زیادہ پایا گیا بلکہ انہیں نیند کے مسائل کا سامنا بھی کرنا پڑا. سان ڈیاگو سکول آف میڈیسن کی سائنسدان کیتھرین میرینیک نے بتایا کہ تقریباً 12 گھنٹے یا اس سے کچھ زائد وقت کے لئے کھانا پینا معطل کرنے کے نتیجے میں جسم کے اندر متعدد ایسی تبدیلیاں واقع ہوتی ہیں کہ جن کا مجموعی اثر بہتر قوت مدافعت، نئے اور صحت مند خلیات اور بائیو کیمیکل مرکبات کے توازن کی صورت میں سامنے آتا ہے. ان مثبت تبدیلیوں کا نتیجہ عمومی صحت اور نیند اور بیماریوں سے لڑنے کی صلاحیت میں اضافے کی صورت میں سامنے آتا ہے.ان کا مزید کہنا تھا کہ اگرچہ حالیہ تحقیقات بریسٹ کینسر کے متعلق کی گئی ہیں لیکن ان سے یہ اشارہ بھی ملتا ہے کہ روزہ رکھنا کینسر کی دیگراقسام کے خلاف بھی مدافعت پیدا کرتا ہے. تحقیق کاروں کا یہ بھی کہنا تھا کہ دو کھانوں کے درمیان وقفہ 24 گھنٹے سے زائد ہونا صحت کے لئے مفید نہیں ہے.

..

ضرور پڑھیں: منرل واٹرکمپنیوں کےخلاف بھی نوٹس لوں گا،چیف جسٹس پاکستان کاسیمنٹ فیکٹریوں کو پانی فراہم کرنے والے تالاب بند کرنے کا حکم

ضرور پڑھیں: ’’ سابق کرکٹرز کی عمران خان سے ملاقات لیکن کسی کو بھی ہمت نہ ہوئی کہ ۔ ۔ ۔‘‘ نجی ٹی وی چینل کا ایسا دعویٰ کہ شائقین کرکٹ کی حیرت کی انتہاء نہ رہے گی