’جو بھی ہمارے ریسٹورنٹ میں داخل ہوتے ہی یہ شرمناک کام کرکے دکھائے گا اسے مفت کھانا کھلائیں گے‘ - Daily Qudrat
Can't connect right now! retry

’جو بھی ہمارے ریسٹورنٹ میں داخل ہوتے ہی یہ شرمناک کام کرکے دکھائے گا اسے مفت کھانا کھلائیں گے‘


برلن (قدرت روزنامہ) یورپی ممالک مسلمان پناہ گزینوں کو دو وقت کا کھانا دینا بھی گوارا نہیں کرتے لیکن عیاشی اور فحاشی کے لئے ان کے ہاں دولت کی کوئی کمی نہیں. اس افسوسناک حقیقت کی ایک تازہ مثال جرمنی کا وہ ریسٹورنٹ ہے کہ جہاں برہنہ ہوکر آنے والوں کو مفت کھانے کی پیشکش کی جا رہی ہے.

ضرور پڑھیں: منرل واٹرکمپنیوں کےخلاف بھی نوٹس لوں گا،چیف جسٹس پاکستان کاسیمنٹ فیکٹریوں کو پانی فراہم کرنے والے تالاب بند کرنے کا حکم

ا خبار دی مرر کے مطابق جرمن دارالحکومت میں کھلنے والے اس ریسٹورنٹ کو جرمن عوام بہت پسند کررہے ہیں اور یہاں برہنہ ہوکر کھانا کھانے والوں کی فہرست طویل سے طویل تر ہوتی جارہی ہے. یہ نیا ریسٹورنٹ پہلے سے قائم بلیک کیٹ ریسٹورنٹ کا حصہ ہے اور گزشتہ ہفتے جب اس کا افتتاح ہوا تو جرمن اداکارہ مکیلا اور پلے بوائے ماڈل سارہ بھی گاہکوں کو کھانا پیش کرنے والی لڑکیوں میں شامل تھیں. اس بے حیائی کے مرکز میں صرف گاہک ہی برہنہ ہوکر نہیں آتے بلکہ انہیں کھانا پیش کرنے والی تمام لڑکیاں بھی برہنہ ہوتی ہیں. ریسٹورنٹ کے افتتاح کے موقع پر مکیلا اور سارہ نے بھی برہنہ ہوکر گاہکوں کو کھانا پیش کیا. جو گاہک مکمل طور پر برہنہ نہیں ہونا چاہتے انہیں صرف کولڈرنک مفت دیا جاتا ہے جبکہ مکمل لباس پہن کر آنے والوں کے لئے اس ریسٹورنٹ میں کوئی چیز بھی مفت نہیں ہے...

ضرور پڑھیں: ’’ سابق کرکٹرز کی عمران خان سے ملاقات لیکن کسی کو بھی ہمت نہ ہوئی کہ ۔ ۔ ۔‘‘ نجی ٹی وی چینل کا ایسا دعویٰ کہ شائقین کرکٹ کی حیرت کی انتہاء نہ رہے گی